یہ جو اک چیز محبت ہے میاں




یہ جو اک چیز محبت ہے میاں
ہم سے پوچھو تو قیامت ہے میاں
ہجر تو خیر بلائے جاں ہے
وصل بھی ایک مصیبت ہے میاں
جو بھی مشکل ہے بہت مشکل ہے
بس یہی ایک سہولت ہے میاں
میں اگر چپ ہوں تو اس کے پیچھے
کتنے برسوں کی ریاضت ہے میاں
تب اسے میری ضرورت تھی بہت
اب مجھے اس کی ضرورت ہے میاں
اسلم کولسری ؔ




اپنا تبصرہ بھیجیں