میرے ہوکےرہو !!!!!




اپنی خاطر جگے ہو، سوئے ہو
اپنی خاطر ہنسے ہو، روئے ہو
کس لئے، آج کھوئے کھوئے ہو
تم نے آنسو بہت پئے اپنے
تم بہت سال رہ لئے اپنے
اب مرے، صرف میرے ہو کر رہو
حسن ہی حسن ہو، ذہانت ہو
عشق ہوں میں، تو تم محبت ہو
تم مری بس مری امانت ہو
جی لئے، جس قدر جیے اپنے
تم بہت سال رہ لئے اپنے
اب مرے، صرف میرے ہو کر رہو
رہتے ہو رنج و غم کے گھیروں میں
دکھ کے، آسیب کے بسیروں میں
کیسے چھوڑوں تمہیں اندھیروں میں
تم کو دے دوں گا سب دیے اپنے
تم بہت سال رہ لئے اپنے
اب مرے، صرف میرے ہو کے رہو
تم ازل سے دکھوں کے ڈیرے ہو
چاہے خود کو غموں سے گھیرے ہو
جب سے پیدا ہوئے ہو میرے ہو
آج کھو لیں گے لب سیے اپنے
تم بہت سال رہ لئے اپنے
اب مرے، صرف میرے ہو کے رہو
اب مجھے اپنے درد سہنے دو
دل کی ہر بات دل سے کہنے دو
میری بانہوں میں خود کو بہنے دو
مدتوں زخم خود سیے اپنے
تم بہت سال رہ لئے اپنے
اب مرے، صرف میرے ہو کے رہو
وصی شاہؔ




اپنا تبصرہ بھیجیں