مسجد اقصیٰ




مسجد اقصیٰ
ایسا اندھیر تو پہلے نہ ہوا تھا لوگو
لو چراغوں کی تو ہم نے بھی لرزتے دیکھی
آندھیوں سے کبھی سورج نہ بجھا تھا لوگو
آئنہ اتنا مکدر ہو کہ اپنا چہرہ
دیکھنا چاہیں تو اغیار کا دھوکہ کھائیں
ریت کے ڈھیر پہ ہو محمل ارماں کا گماں
ادا جعفری




اپنا تبصرہ بھیجیں