اداکار




اداکار
ابھی اس زمیں ہمارے لئے
کوئی کردار لکھا گیا ہے نہ کوئی ضمانت
ابھی وادی خاک کے ایک گوشے میں ہم
اک ڈرامے کے منظر سجانے کی خاطر
مٹر گشت پر ہیں
ہمیں حکم ہے
ہر گھڑی ایک کردار کو با وفا دلر باجاں پناہ
اور بہت کچھ بنانے کی خاطر
کسی نیم جاں بے وفا اور لاچار بندے کا کردار کر تے رہیں
اور بڑے رول کرنے کی حسرت لئے
خاک کا سائباں اوڑھ لیں
اعجاز رضوی ؔ




اپنا تبصرہ بھیجیں